جمعرات , 27 جولائی 2017

Home » اہم » “بابائے خدمت” عبدالستار ایدھی کو ہم سے بچھڑے 1 برس بیت گیا:

“بابائے خدمت” عبدالستار ایدھی کو ہم سے بچھڑے 1 برس بیت گیا:

دکھی انسانیت کی خدمت کےلیے زندگی وقف کرنے والے مرحوم عبدلستارایدھی کو ہم سے بچھڑے ایک برس بیت گیا۔ مگر فلاح انسانی سے وابستہ کارکن اور ایدھی ہوم کے ننھے بچے اب بھی عبدالستار ایدھی کواپنے درمیان محسوس کرتے ہیں۔ 1951 میں بالکل صفر سے آغاز کرنے والے عبدالستار ایدھی نے پاکستان کو سب سے بڑا فلاحی ادارہ دیا، وہ ملک و قوم کے ہیرو ہیں۔کپڑوں کے 2 جوڑوں پر مطمئن ایدھی صاحب بغیر کھڑکی اور سفید ٹائلوں والے ایک کمرے میں رہائش پذیر تھے.لڑکپن سے ہی ایدھی میں سماجی خدمت کا جذبہ نمایاں تھا۔ آج ایدھی ہم میں نہیں مگر ان کا نام اور کارنامے انہیں زندہ رکھے ہوئے ہیں، ایک گاڑی سے شروع ہونے والا سفر آج دنیا کی سب سے بڑی فلاحی ایمبولینس سروس بن چکا ہے۔ایدھی صاحب نے پاکستان کے غریب اور مفلس افراد کے لیے اس کام کا آغاز کیا اور قوم کو اس حوالے سے متحرک کیا کہ وہ عطیات دیں اور کام کرنے میں مدد کریں، جس سے فلاحی اداروں کی کمی کی وجہ سے آنے والے خلاء کو دور کیا جاسکے۔
ایدھی بھارتی ریاست گجرات کے شہر بانٹو میں پیدا ہوئے ، ان کے خاندان نے تقسیم ہند کے بعد 4 ستمبر 1947ء کو ہجرت کی اور کراچی میں میٹھا در کو اپنا مسکن بنایا۔ ابتدائی تعلیم کے دوران ہی وہ گھر سے ملنے والے دو پیسوں میں سے ایک پیسہ ضرورت مندوں پر خرچ کرتے تھے تاہم والدہ کی بیماری عبدالستار ایدھی کی زندگی کا اہم موڑ ثابت ہوئی۔ایدھی بھارتی ریاست گجرات کے شہر بانٹو میں پیدا ہوئے ، ان کے خاندان نے تقسیم ہند کے بعد 4 ستمبر 1947ء کو ہجرت کی اور کراچی میں میٹھا در کو اپنا مسکن بنایا۔ ابتدائی تعلیم کے دوران ہی وہ گھر سے ملنے والے دو پیسوں میں سے ایک پیسہ ضرورت مندوں پر خرچ کرتے تھے تاہم والدہ کی بیماری عبدالستار ایدھی کی زندگی کا اہم موڑ ثابت ہوئی۔
نہ کوئی رنگ کی تفریق نہ زبان کا فرق، ہرلاچاراور مصیبت زدہ کی بے لوث خدمت کرنے والے مرحوم عبدالستار ایدھی بے سہاروں کا سہارا بن کر جیتے رہے۔عبدالستارایدھی کے صاحبزادے فیصل ایدھی کا کہنا ہے کہ فلاحی کام اب بھی جاری ہے مگر ایدھی صاحب کی یادیں فلاحی کاموں کے ساتھ ہیں۔ایدھی فاؤنڈیشن کی مختلف ممالک میں بھِی شاخیں ہیں، اسی لئےعبدالستار ایدھی کی فلاحی خدمات کو ملکی اور عالمی سطح پربھرپور پذیرائی ملی مختلف ممالک نے ان کی خدمات کے اعتراف میں انہیں ایوارڈز سے نوازا حکومت پاکستان نے انہیں نشانِ امتیاز دیا۔ عبدالستار ایدھی نے اپنی سوانح عمری بھی تحریر کی جو کتابی شکل میں موجود ہے۔

“بابائے خدمت” عبدالستار ایدھی کو ہم سے بچھڑے 1 برس بیت گیا: Reviewed by on . دکھی انسانیت کی خدمت کےلیے زندگی وقف کرنے والے مرحوم عبدلستارایدھی کو ہم سے بچھڑے ایک برس بیت گیا۔ مگر فلاح انسانی سے وابستہ کارکن اور ایدھی ہوم کے ننھے بچے اب دکھی انسانیت کی خدمت کےلیے زندگی وقف کرنے والے مرحوم عبدلستارایدھی کو ہم سے بچھڑے ایک برس بیت گیا۔ مگر فلاح انسانی سے وابستہ کارکن اور ایدھی ہوم کے ننھے بچے اب Rating: 0

Leave a Comment

scroll to top