بدھ , 22 نومبر 2017

Home » تازہ ترین » برتری کا احساس طلبا کے لئے نقصان دہ

برتری کا احساس طلبا کے لئے نقصان دہ

خود اعتمادی اور ہوشیاری طلبا میں اچھی سمجھی جاتی ہے مگر حالیہ تحقیق کے مطابق حد سے زیادہ خود اعتمادی اور اکڑ کا مظاہرہ طالب علموں کے لئے نقصان دہ ثابت ہوتا ہے۔ کمرہ کلاس میں جو طلبا خود اعتمادی سے بات چیت کرتے ہیں، استاد کے سوالوں کا جواب دیتے ہیں، ان کو ہمیشہ تحسین آمیز نظروں سے دیکھا جاتا ہے۔ اپنی علمی قابلیت اور تعلیمی صلاحیتوں پر بھروسہ رکھنے والے یہ طلبا سب کو بھاتے ہیں۔

خود اعتمادی کے تسلسل میں کچھ بچے اکڑ اور ہٹ دھرمی کا مظاہرہ بھی کرنے لگ جاتے ہیں، جو کہ ان کے حق میں بہتر ثابت نہیں ہوتا۔ حالیہ کی گئی تحقیق کے مطابق اکڑ رکھنے والے بچوں کو کلاس روم کے دیگر افراد پسند نہیں کرتے۔

"صرف تعلیمی قابلیت اور اچھے گھر کا بھر م ہونا ہی ضروری نہیں"۔ دراصل بچوں کو شروع دن سے ہی محبت، بھائی چارہ، مل جل کر کام کرنے کی ترغیب دینی چاہئے۔ ماہرین نفسیات کے مطابق ایسا شخص جو شروع سے ہی خود نمائی کے تصور میں مبتلا ہو جائے، بعد میں اس سے اچھے روئے کی امید کم ہی رکھی جا سکتی ہے۔ دراصل ایسے افراد شیخی باز بن جاتے ہے اور ہر معاملے میں قیادت کرنا چاہتے ہیں۔

تحقیق سے ثابت ہوا ہے کے اکڑ باز اور ہٹ دھرم طلبائ ،ساتی طلبا ئ میں احساس کمتری پیدا کرتے ہیں

تحقیق سے ثابت ہوا ہے کہ زیادہ قابل،زہین، اکڑ باز اور ہٹ دھرم طلبا،ساتھی طلبا میں احساس کمتری اور خوف پیدا کرتے ہیں۔

کچھ طلبا اپنی خاص قابلیت کی وجہ سے اس مخصوص کام میں زیادہ عزت حاصل کر جاتے ہیں، جیسا کہ تقریری مقابلہ جات، اور کھیل میں حصہ لینے والے طلبا،باقی کلاس سے زیادہ اہمیت اور جگہ بنا جاتے ہیں۔ اسی طرح پڑھائی میں بھی کچھ بچے ریاضی، طبیعیات، انگریزی، علم و ادب اور شاعری میں اپنی ایک الگ پہچان رکھتے ہیں۔

یہ تحقیق سماجی نفسیات دانوں کے ایک گروپ نے کی ہے اور انہوں نے یہ نتیجہ اخذ کیا ہے کہ "ایک طالب علم میں دیگر ہم عمر ساتھیوں سے برتری کا احساس خطر ناک ثابت ہوتا ہے جو اس کی بعد کی زندگی میں مسائل پیداکر سکتا ہے"۔ اس احساس کو کنٹرول کرنے میں اساتذہ، والدین اور بڑی عمر کے دوست بچے معاون ثابت ہوسکتے ہیں۔

برتری کا احساس طلبا کے لئے نقصان دہ Reviewed by on . خود اعتمادی اور ہوشیاری طلبا میں اچھی سمجھی جاتی ہے مگر حالیہ تحقیق کے مطابق حد سے زیادہ خود اعتمادی اور اکڑ کا مظاہرہ طالب علموں کے لئے نقصان دہ ثابت ہوتا ہے۔ خود اعتمادی اور ہوشیاری طلبا میں اچھی سمجھی جاتی ہے مگر حالیہ تحقیق کے مطابق حد سے زیادہ خود اعتمادی اور اکڑ کا مظاہرہ طالب علموں کے لئے نقصان دہ ثابت ہوتا ہے۔ Rating:
scroll to top