ہفتہ , 23 ستمبر 2017

Home » تازہ ترین » دنیا بھر میں 80فیصد پانی آلودہ ہے: تحقیق

دنیا بھر میں 80فیصد پانی آلودہ ہے: تحقیق

ایک نئی تحقیق میں معلوم ہوا ہے کہ دنیا بھر میں 80فیصد سے زائد نل کا پانی پلاسٹک سے آلودہ ہے۔تحقیق میں معلوم ہوا کہ امریکا میں آلودہ پانی کی شرح سب سے زیادہ 93فیصد ہے۔ جس کے بعد لبنان اور بھارت آتے ہیں۔فرانس، جرمنی اور برطانیہ میں پانی میں آلودگی کی سطح سب سے کم ہے۔تاہم پھر بھی ان کی شرح 72فیصد ہے۔کُل ملا کر دنیا بھر سے درجنوں ممالک سے جمع کیے گئے نمونوں کے83 فیصد پانی میں مائیکرو پلاسٹک موجود تھا۔سائنس دانوں نے خبردار کیا ہے کہ مائیکرو پلاسٹک بہت چھوٹے ہوتے ہیں اور اعضاء میں گُھس سکتے ہیں۔تحقیق یونیورسٹی آف مینیسوٹا کے سائنس دانوں نے کی جس کے نتائج دی گارجیئن میں شائع کیے گئے۔سائنس دانوں نےدنیا بھر سے 159 نمونوں کو پرکھا جس میں یوگانڈا، ایکواڈور اور انڈونیشیا جیسے خطے شامل تھے۔مائیکرو پلاسٹکس ، پلاسٹک کے ایسے ذرے ہوتے ہیں جو پانچ ملی میٹر سے کم کے ہوتے ہیں۔
گیلوے مایو انسٹیٹیوٹ سے تعلق رکھنے والی ڈاکٹر اینے میری مہن ، جنہوں نے آئرلینڈ میں مائیکرو پلاسٹک سے آلودہ نل کے پانی کی تصدیق کرنے والی تحقیق کی تھی، کا کہنا تھا کہ مائیکرو پلاسٹکس اتنے چھوٹے ہوتے ہیں کہ وہ خلیوں اور اعضاء میں گُھس سکتے ہیں۔پچھلی تحقیق نے یہ بھی بتایا کہ مائیکرو پلاسٹک زہریلے کیمیکلز جذب کرتے ہیں جو بعد میں جانوروں کے پیٹ ملے۔انسان ہوا میں گردش کرتے مائیکروپلاسٹک میں سانس بھی لے سکتے ہیں۔کنگز کالج لندن کی انوائرنمنٹل ہیلتھ کے پروفیسر فرینک کیلی نے کہا کہ اگر ہم سانس کے ساتھ مائیکروپلاسٹکس اندر لے جائیں،جو ممکنہ طور پر کیمیکلز ہمارے پھیپڑوں کے نچلے حصے میں جاسکتے ہیں اور ہوسکتا ہے خون کے دورانیے میں پہنچ جائیں۔ماضی میں ہونے والی ایک تحقیق کے مطابق سات لاکھ پلاسٹک فائبرس واشنگ مشین کے ہر چکر میں موحول میں جاتے ہیں۔

دنیا بھر میں 80فیصد پانی آلودہ ہے: تحقیق Reviewed by on . ایک نئی تحقیق میں معلوم ہوا ہے کہ دنیا بھر میں 80فیصد سے زائد نل کا پانی پلاسٹک سے آلودہ ہے۔تحقیق میں معلوم ہوا کہ امریکا میں آلودہ پانی کی شرح سب سے زیادہ 93فی ایک نئی تحقیق میں معلوم ہوا ہے کہ دنیا بھر میں 80فیصد سے زائد نل کا پانی پلاسٹک سے آلودہ ہے۔تحقیق میں معلوم ہوا کہ امریکا میں آلودہ پانی کی شرح سب سے زیادہ 93فی Rating: 0

Leave a Comment

scroll to top