جمعہ , 21 جولائی 2017

Home » تازہ ترین » دنیا کی پہلی ماحول دوست ہائیڈروجن مسافر ٹرین تیار

دنیا کی پہلی ماحول دوست ہائیڈروجن مسافر ٹرین تیار

اس ٹرین کا نام ’’ ہائڈریل‘‘ رکھا گیا ہے جسے جرمنی کے لیے فرانس کی ایک کمپنی ایلسٹوم نے تیار کیا ہے۔ اسے دنیا کی ماحول دوست سواری قرار دیا جاسکتا ہے کیونکہ ہائیڈروجن انجن کی بنا پر یہ بہت خاموش اور پرسکون سواری ہے اور صرف بھاپ اور پانی کے بخارات ہی فضا میں خارج کرتی ہے جو ماحول کو کوئی نقصان نہیں پہنچاتے۔ جرمنی میں اس وقت 4 ہزار ٹرینوں کا ایک نیٹ ورک ہے جو ڈیزل سے چلتا ہے لیکن انہیں ہائیڈروجن پر منتقل کرکے گرین ہاؤس کی وجہ بننے والی گیسوں کا اخراج صفر کیا جاسکتا ہے۔گزشتہ ہفتے جرمنی میں ہونے والی ایک ٹرانسپورٹ نمائش میں ہائیڈروجن ٹرین کا عملی مظاہرہ کیا گیا اور اسے ہائیڈریل کا نام دیا گیا ہے۔ پہلے اسے تجرباتی طور پر شمال مغربی جرمنی میں چلایا جائے گا اور پھر اجازت کے بعد دسمبر 2017 میں اسے جرمنی میں بڑے پیمانے پر استعمال کیا جائے گا۔
جرمنی کی ریاست لوور سیکسونی کے نے فرانسیسی کمپنی کو مزید 14 ہائڈریل بنانے کا آرڈر دے دیا ہے جسے مختلف علاقوں میں آزمایا جائے گا۔ اس میں لیتھیئم آئن بیٹریاں نصب ہیں جو ٹرین کو چلاتی ہیں اور بیٹریوں کو ٹرین کی چھت پر لگے ہائیڈروجن ایندھنی ٹینک سے توانائی فراہم کی جاتی ہے۔ ایک ڈبے کے لیے 94 کلوگرام کا ایندھنی ٹینک پورے دن کے لیے کافی ہوتا ہے اور 140 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے 300 مسافروں کو منزل پر پہنچادیتا ہے۔ اگرچہ اس سے قبل بھی ہائڈروجن سے ریل چلانے کے تجربات کیے گئے ہیں لیکن یہ پہلی باقاعدہ مسافر ٹرین ہے جو گیس کو بطور ایندھن استعمال کرے گی۔

دنیا کی پہلی ماحول دوست ہائیڈروجن مسافر ٹرین تیار Reviewed by on . اس ٹرین کا نام ’’ ہائڈریل‘‘ رکھا گیا ہے جسے جرمنی کے لیے فرانس کی ایک کمپنی ایلسٹوم نے تیار کیا ہے۔ اسے دنیا کی ماحول دوست سواری قرار دیا جاسکتا ہے کیونکہ ہائیڈ اس ٹرین کا نام ’’ ہائڈریل‘‘ رکھا گیا ہے جسے جرمنی کے لیے فرانس کی ایک کمپنی ایلسٹوم نے تیار کیا ہے۔ اسے دنیا کی ماحول دوست سواری قرار دیا جاسکتا ہے کیونکہ ہائیڈ Rating: 0

Leave a Comment

scroll to top