جمعہ , 20 اکتوبر 2017

Home » سارےرنگ کا تعارف

سارےرنگ کا تعارف

خبر اور تحقیق میں بہت نمایاں فرق ہوتا ہے۔ایک بڑی ویب سائٹ جس میں مختلف اقسام کی درجہ بندی ہو، اس پر مسلسل تحقیقی مواد شامل کرنا فرد واحد کے بس میں نہیں۔خبریں دراصل روزانہ  کی بنیاد پر شائع کی جاتی ہیں، جنکو عموما دوسرے دن قارئین بھول کر، اگلے دن کا اخبار اٗٹھا لیتے ہیں۔


سارے رنگ میرا علمی خزانہ اور محبوب مشغلہ ہے بلکہ مطالعہ کا جنون ہے، ویب سائٹ کی ایک اصطلاح "بلاگ" ہے، یعنی ہم اپنے روز مرہ کے مشاہدات اور مطالعہ کو ویب سائٹ پر ڈائری کی صورت میں لکھتے رہتے ہیں۔معلومات عامہ کو یاد رکھنے کا بھی یہ ایک بہترین زریعہ ہے۔ میری کوشش ہے کہ جو کچھ میں پڑھتا رہتا ہوں اسے میرے دوست اور قارئین بھی پڑھیں، اس لئے یہ ویب سائٹ بنا لی۔


سارے رنگ، دراصل میری ذات میں چھپے ان رنگوں کا نام ہےجو مجھے ہر فن مولا بننےاور مسلسل سیکھنے پر راغب کرتے رہتے ہیں۔کسی شخص کو بیک وقت مختلف علوم میں دلچسپی ہو اور وہ اپنا بڑاوقت معاشرت، معیشت، انسانیت، فلکیات، جغرافیہ، سیاست، نظام کائنات، دنیاوی معاملات، نئی کتابیں،نئے علوم ، دنیابھرکی سیاسی، مذہبی، فوجی، معلومات کو پڑھنے، سمجھنے کا شوقین ہو تو ایسا شخص یا تو پاگل تصور ہوگا یا پھر فلسفی اور دانشور۔


چھوٹی عمر میں، فلسفہ ،دانش، خودی ، خودداری، ذات اور ملکوت و حجابات کی بحث میں اپنی دماغی، فکری، تخیلاتی صلاحیتوں کو استعمال کرناصرف اصطفائی قبولیت کے زمرے میں آتاہے۔ ہر باشعور جانتا ہے کہ ہمارا  نظام تعلیم اور معاشی حالات ہماری فکری صلاحیت کو کس درجہ محدود کر رہے ہیں، لاکھو ں بچوں میں صرف اعلی ڈگری کے حصول کی خواہش اور پھر عمر بھر نوکری کی صورت کسی نہ کسی در کی غلامی۔ اس ماحول میں دانش کیسے پیدا ہو؟


علم ہی وہ واحد راستہ ہے جو انسان کو باشعور اور سمجھدار بناتا ہے۔ سارے رنگ، میری تلاش کی ڈائری ہے۔ اور اس کو میں نے اپنے نام سے اس لیے منسوب کیا ہے کہ عموما کسی ویب سائٹ پر مواد تو مل جاتا ہے لیکن صاحب قلم نہیں ملتا۔ لہٰذا اس ویب سائٹ پر عبدالماجد حاضر ہے مجھے آپکے مفید مشوروں کاانتظار رہے گا۔


نوٹ: میری کوشش ہے کہ اس ویب سائٹ پر قارئین کو بہتر مواد پڑھنے کو ملے۔ ایک خیا ل آیا کہ اگر کوئی کہے ، کہ اس طرح کی ساری انفارمیشن وکی پیڈیا پر موجود ہے ، مجھے تکلف کی کیا ضرورت ہے ؟ تو اس کا جواب یہ دینا چاہتا ہوں کہ انٹرنیٹ پر بے شمار ویب سائٹس ہیں اور ہر ویب سائٹ اپنے ایک خاص مقصد کے تحت تحریر یں ، تصاویر اور ویڈیوز شائع کرتی ہے۔میرا سب سے بڑا مقصد تو اس ویب سائٹ کے بہانے خود اپنے آپ کو مزید اور مزید علم سے اور معلومات سے روشناس کروانا۔ اسی جذبہ کے تحت یقین جانئے روز بروز میری علم کی پیاس بجھتی ہے۔ دوسرا یہ ارود میں بھی کوئی ویب سائٹ ہونی چاہیے جہاں ہر وقت کچھ نہ کچھ قارئین کے علم بھی اضافہ کرئے۔

scroll to top