اتوار , 23 جولائی 2017

Home » این جی اوز » شام کی ایک اور نومولود بچی کی تصویر سوشل میڈیا پر چھا گئی

شام کی ایک اور نومولود بچی کی تصویر سوشل میڈیا پر چھا گئی

دنیا بھر میں جاری حالیہ عسکری تنازعات خواہ ان کی بنیاد کوئی بھی ہو ہماری آنے والی نسلوں پر خوف اور وحشت کے ا ن گنت نقوش چھوڑرہی ہے ۔ہر گزرا ہوا وقت تاریخ بن جاتا ہے اور ماضی سے سبق سیکھ کر اپنے مستقبل کو سدھارنے والے ہی امر ہوتے ہیں ۔ اقوام متحدہ کی سیکورٹی کونسل 2005اور2006کی قراردوں کے مطابق اس بات کی پابند ہے کہ وہ جنگی علاقوں میں بچوں کے قتل عام ،، فوج میں شمولیت ،،جنسی تشدد ،،اغوا،،ہسپتالوں اور اسکولوں پر حملے ،، جیسی سنگین خلاف ورزیوں پر نہ صرف نظر رکھے بلکہ ان کے سدباب کیلیئے اپنا کردار بھی ادا کرے ۔بدقسمتی سے دنیا بھر کے وہ ممالک جو اقتصادی طور پر مضبو ط ہیں یا پھر سائنس اور ٹیکنولوجی میں اہم مقام رکھتے ہیں اور جو اقوام متحدہ میں امن وامان کے قیام کیلیئے عملی کردار ادا کرسکتے ہیں کسی نہ کسی طرح ان عسکری تنازعات میں شریک ہیں ۔کہیں پر مدد کے نام پر ،،کہیں پر دہشت گردوں کے تعاقب میں ،،کہیں پر وسائل کے حصول کے لئے،، ۔یعنی اقوام متحدہ کی سیکورٹی کونسل میں شامل ممالک کسی نہ کسی طرح اپنے ویٹو پاور کے سہارے دنیا کے امن میں رکاوٹ بنے ہوئے ہیں ۔یہی وجہ ہے OIC جےسے ا د ارو ں کے غیر فعال ہونے کے بعد اقوام متحدہ بھی بے اثر ہوتی نظر آرہی ہے ۔ UNICEF کے مطابق تقریبا سات کروڑ بچے اس وقت دنیا میں اپنی بقاءکی جنگ لڑ رہے ہیں ۔ غربت ،صحت ،بھوک ،سے بڑھ کر یہ بچے عدم تحفظ کا شکار ہیں ۔ دوسرے ممالک میں غیر قانونی داخل ہونے والے بچوں کی بڑی تعداد انسانی ا سمگلرزکے لئے آسان ہدف بن رہی ہے ۔عراق ، افغانستان ،شام ،لیبیا ،لبنان ، یمن، ساوتھ سوڈان ، وسطی افریقی ریپبلک، میں جنگی تنازعات نے بڑی تعداد میں بچوں کو متاثر کیا ہے.
حال ہی میں شام میں جنگی طیاروں کی برستی آگ نے زمین پر ہر شے تباہ کر دی۔ ادلیب میں ایک تباہ شدہ عمارت سے کئی گھنٹے بعد ایک ماہ کی بچی کو زندہ نکال لیا گیا۔ بچی کے زندہ نکلنے پر ریسکیو اہلکار اپنے جذبات پر قابو نہ رکھ پایانومولود کو سینے سے لگائےروتا رہا۔خبر پڑھنے کے دوران بی بی سی اینکر بھی آبدیدہ ہوگئیں، شامی انسانی حقوق کی ایک تنظیم کے مطابق اس فضائی حملے میں چھ افراد ہلاک ہوئے ہیں۔ عالمی ادارہ صحت کی رپورٹ کے مطابق شام میں گزشتہ چند ہفتوں میں ایک سو نو بچے بمباری میں اپنی جانیں گنوا چکے ہیں۔
اس کم سن بچی ی تصویر کی بھی سوشل میڈیا اور عالمی ذرائع ابلاغ پر اسی طرح تشہیر کی جارہی ہے جس طرح ایک سال قبل ترکی کے ساحل پر ایک تین سالہ بچے ایلان کردی کی لاش کی تیرتی ہوئی تصویر کی تشہیر کی گئی تھی۔اس تصویر نے ایک مرتبہ پھر عالمی ضمیر کو جھنجھوڑ کر رکھ دیا ہے اور میڈیا ذرائع اپنی خبروں ،تجزیوں اور تبصروں میں شام میں جاری خونیں جنگ کے خاتمے کی ضرورت پر زوردے رہے ہیں۔

شام کی ایک اور نومولود بچی کی تصویر سوشل میڈیا پر چھا گئی Reviewed by on . دنیا بھر میں جاری حالیہ عسکری تنازعات خواہ ان کی بنیاد کوئی بھی ہو ہماری آنے والی نسلوں پر خوف اور وحشت کے ا ن گنت نقوش چھوڑرہی ہے ۔ہر گزرا ہوا وقت تاریخ بن جات دنیا بھر میں جاری حالیہ عسکری تنازعات خواہ ان کی بنیاد کوئی بھی ہو ہماری آنے والی نسلوں پر خوف اور وحشت کے ا ن گنت نقوش چھوڑرہی ہے ۔ہر گزرا ہوا وقت تاریخ بن جات Rating: 0

Leave a Comment

scroll to top