پیر , 23 اکتوبر 2017

Home » اہم » فخر پاکستان عبدالستار ایدھی وفات پا گئے:

فخر پاکستان عبدالستار ایدھی وفات پا گئے:

عبدالستار ایدھی خدمت خلق کے شعبہ میں پاکستان اور دنیا کی جانی مانی شخصیت تھے، جو پاکستان میں ایدھی فاؤنڈیشن کے تاحیات صدر رہے اور اپنی پوری زندگی نسانیت کی خدمت کے لئے وفط کر دی۔

انسانیت اور ہمدردی کے جذبہ سے سرشار اور دنیا بھر میں اپنے فلاہی کاموں کی وجہ سے شہرت پانے والے اور فلاحی تنظیم ایدھی فاؤنڈیشن کے بانی عبدالستار ایدھی کراچی میں انتقال کر گئے ہیں۔ ان کی عمر ٨٨ برس تھی۔ وہ پچھلے کچھ برس سے ردوں کے عارضے میں مبتلا تھے اور سندھ انسٹیٹیوٹ آف یورولوجی میں ان کا علاج ہو رہا تھا۔ اگر ان کے خدمت خلق کے حوالے سے بات کی جائے تو یہ کہنا غلط نہ ہو گا کہ وہ پاکستان کے غریب، یتیم اور لاوارث افراد کے مسیحا تھے۔ انھوں نے لاوارث بچوں کے سر پر ہاتھ رکھا ۔ ان کا یہ کہنا تھا کہ ایدھی فاؤنڈیشن کے قیام کا مقصد ہی غریب، یتیم اور لاوارث افراد کو ایک چھت کے نیچے پناہ دینا ہے۔ ایدھی فاؤنڈیشن کی ایمبولینس کا ذکر کیا جائے تو کون سی ایسا حادثہ، سانحہ ہو گا جہاں ایدھی فاؤنڈیشن کے رضاکار اور ایمبولینس بر وقت امداد کو نا پہنچی ہوں۔ میتوں کو غسل دینا اور لاوارث میتوں کو دفنانا ان کے فلاحی کاموں میں سے ایک ہیں۔ یہ فلاحی تنظیم صرف پاکستان تک محیط نہیں بلکہ اس فاؤنڈیشن کی برمراکز دنیا کے مختلف ممالک میں موجود ہیں جو وہاں پر فلاحی خدمات انجام دے رہے ہیں۔1997ء گینیز بک آف ورلڈ ریکارڈ کے مطابق ایدھی فاؤنڈیشن کی ایمبولینس سروس دنیا کی سب سے بڑی فلاحی ایمبولینس سروس ہے۔ ایدھی بذات خود بغیر چھٹی کیے طویل ترین عرصہ تک کام کرنے کے عالمی ریکارڈ کے حامل رہ چکے ہیں۔پاکستانی قوم کا سرمایہ اور فخر کہلانے والا اس دنیا سے رخصت ہو گیا مگر ایدھی صاحب کی ملک و قوم کے لئے کی گئی خدمات کو ہم نہیں بھولیں گے۔

فخر پاکستان عبدالستار ایدھی وفات پا گئے: Reviewed by on . انسانیت اور ہمدردی کے جذبہ سے سرشار اور دنیا بھر میں اپنے فلاہی کاموں کی وجہ سے شہرت پانے والے اور فلاحی تنظیم ایدھی فاؤنڈیشن کے بانی عبدالستار ایدھی کراچی میں انسانیت اور ہمدردی کے جذبہ سے سرشار اور دنیا بھر میں اپنے فلاہی کاموں کی وجہ سے شہرت پانے والے اور فلاحی تنظیم ایدھی فاؤنڈیشن کے بانی عبدالستار ایدھی کراچی میں Rating: 0

Leave a Comment

scroll to top