بدھ , 18 اکتوبر 2017

Home » انٹرٹینمنٹ » نازیہ حسن کو مداحوں سے بچھڑے ١٦ برس بیت گئے

نازیہ حسن کو مداحوں سے بچھڑے ١٦ برس بیت گئے

اگر یہ کہا جائے کہ نازیہ حسن پاپ میوزك کی جان تھیں تو یہ کہنا غلط نہ ہو گا۔برصغیر میں پاپ میوزك متعارف کرانے والی نازیہ حسن ایک خوش شكل اور خوبصورت آواز كی مالك تھی۔ جنھوں نے 15 برس كی عمر میں گائیكی كا آغاز كیا۔اور ان کی آواز میں ایسا جادو تھا کہ لوگ انکی آواز کو داد دیئے بغیر نہیں رہ سکتے تھے۔ان كی گائیكی سے متاثر ہوكر بھارتی پروڈیوسر وہدایت کار فیروز خان نے فلم “قربانی” میں “آپ جیسا كوئی میری زندگی میں آئے” شامل كیا اور یہ گانا راتوں رات شہرت کی بلندیوں کو جھونے لگا۔نازیہ حسن کا پہلا البم “ڈسكو دیوانے تھا جس نے كامیابی كے نئے ریكارڈ قائم كئے۔ اس البم میں انکے بھائی زوہیب حسن نے بھی اپنی آواز كا جادو جگایا۔اور دونوں بہین بھائی کی جوڑی بعد میں بھی كئی یادگار گیت گائے۔ “بوم بوم”،”ینگ ترنگ”، “ہاٹ لائن” اور “كیمرہ كیمرہ”ان کی بہترین البمز میں شمار ہوتی ہیں جن کے گانے بے حد مقبول ہوئے۔ہ اپنے منفرد انداز اور ہٹ گیتوں كے باعث نئے سنگرز كے لئے رول ماڈل بن چكیں تھیں،ایک بہترین گلوکارہ کے ساتھ ساتھ ناذیہ حسن سماجی کاموں میں بھی پیش پیش رہتی تھیں۔نازیہ حسن نے پاكستان میں منشیات كے بڑھتے ہوئے استعمال كو روكنے كیلئے”بین” كے نام سے اینےكیرئیر كے عروج میں ہی نازیہ حسن كو پھیپھڑوں كا كینسر لاحق ہوگیا جس كے باعث وہ ١٣ اگست ٢٠٠٠ كو لندن كے اسپتال میں۔ ٣٥ برس کی عمر میں انتقال كرگئیں او اپنے مداحوں کو سوگوار چھوڑ گئی۔ حکومت پاکستان نے انہیں میوزك كی دنیا میں لاتعداد خدمات كے نتیجے میں نازیہ حسن کو اعلیٰ ترین سول ایوارڈ “پرائڈ آف پرفارمنس” سے بھی نوازا۔ان کو آج مداحوں سے بچھڑے ١٦ برس بیت گئے مگر ان کی سوریلی آواز آج بھی انکے مداحوں کے دلوں میں زندہ ہے۔

نازیہ حسن کو مداحوں سے بچھڑے ١٦ برس بیت گئے Reviewed by on . اگر یہ کہا جائے کہ نازیہ حسن پاپ میوزك کی جان تھیں تو یہ کہنا غلط نہ ہو گا۔برصغیر میں پاپ میوزك متعارف کرانے والی نازیہ حسن ایک خوش شكل اور خوبصورت آواز كی مالك اگر یہ کہا جائے کہ نازیہ حسن پاپ میوزك کی جان تھیں تو یہ کہنا غلط نہ ہو گا۔برصغیر میں پاپ میوزك متعارف کرانے والی نازیہ حسن ایک خوش شكل اور خوبصورت آواز كی مالك Rating: 0

Leave a Comment

scroll to top