جمعہ , 21 جولائی 2017

Home » اہم » پاکستان ریلوے نہیں اورینج ٹرین سہی:

پاکستان ریلوے نہیں اورینج ٹرین سہی:

مکرمی! اگر آپ پاکستان ریلویز سسٹم کی تاریخ اور تاریخی پس منظر میں ملک کی معیشت اور اقتصادیات اور مالیات لین دین کے میدان میں اسکے بحیثیت قومی اقتصادی ادارے کے کردار کا جائزہ لیں تو آپ واضح نظر آجائے گا آج ملکی معیشت کی گاڑی خسارے میں جا رہی تو اسکی ایک وجہ ملکی معیشت کی آمدنی کا سب سے بڑا ذریعہ ریلوے ہی کو پٹری سے ڈی ایل کرنا ہے قوم کو پہلے میٹرو پلاسٹک کی بنی میٹرو بس کا مہنگا پراجیکٹ والا کھلونا دیا گیا تو اب اسی پلاسٹک کا ایک اور کھلونا اورینج ٹرین مہنگا پرایکٹ دیا ہی جانیوالا ہے۔ کاش اگر حکمرانوں نے قومی خزانے پر شب خون نہ مارا ہوتا تو اتنے سرمائے سے چاروں صوبے آزاد کشمیر شمالی علاقہ گلگت و بلتستان اپنا اپنا صوبائی ریاستی ریلوے سسٹم شروع کر سکتے تھے۔ نادرن ریلویز جو آج پاکستان ریلوے ہے کے ساتھ ہی کراچی سرکلر ریلوے۔ ٹرم سروس کی ٹرین چلا کر ایک ادارے کو مضبوط کیا تھا۔ آج پاکستان ریلویز سسٹم کی زبوں حالی کا کوئی ولی وارث نہیں اگر قوم کو ایک پلیٹ فارم پر متحد رکھنا ہے تو حکمرانوں کو ازراہ تکلیف ان پراجیکٹس سے تھوڑا سا وقت نکال کر یہ بھی سوچنا چاہئے کہ رحیم یار خان‘ ڈیرہ غازی خان‘ بلوچستان بھی اسی پاکستان میں ہیں

پاکستان ریلوے نہیں اورینج ٹرین سہی: Reviewed by on . مکرمی! اگر آپ پاکستان ریلویز سسٹم کی تاریخ اور تاریخی پس منظر میں ملک کی معیشت اور اقتصادیات اور مالیات لین دین کے میدان میں اسکے بحیثیت قومی اقتصادی ادارے کے ک مکرمی! اگر آپ پاکستان ریلویز سسٹم کی تاریخ اور تاریخی پس منظر میں ملک کی معیشت اور اقتصادیات اور مالیات لین دین کے میدان میں اسکے بحیثیت قومی اقتصادی ادارے کے ک Rating: 0

Leave a Comment

scroll to top