ہفتہ , 23 ستمبر 2017

Home » اہم » پاکستان کا درجہ حرارت انتہائی حد تک بڑھنے کا خدشہ:

پاکستان کا درجہ حرارت انتہائی حد تک بڑھنے کا خدشہ:

موسم کی تغیراتی تبدیلیوں پر نظر رکھنے والے ماہرین نے پاکستان میں بڑھتے درجہ حرارت کے پیش نظر خدشہ ظاہر کیا ہے کہ آئندہ پچاس برس کے دوران جنوبی ایشیاء کے متعدد علاقوں کے درجہ حرات میں ہولناک حد تک اضافہ ہوسکتا ہے۔
جرمنی کے نشریاتی ادارے میں شائع ہونے والی رپورٹ کے مطابق آئندہ چند سالوں میں پاکستان سمیت جنوبی ایشیاء کے متعدد علاقوں کا درجہ حرارت 6 ڈگری سینٹی گریڈ تک بڑھنے کا خطرہ ہے، ماہرین کا کہنا ہے کہ اگر درجہ حرارت بڑھ گیا تو سایہ دار مقامات پر رہنا مشکل ہوسکتا ہے۔ماہرین نے خبردار کیا ہے کہ اگر موسمی صورتحال اسی تیزی سے تبدیل اور گرمی کی شدت میں اضافہ ہوتا رہا تو عین ممکن ہے کہ جنوبی ایشیاء کی انسانی آبادیاں ویران ہوجائیں اور اس خطے میں کسی زندہ مخلوق کا نام و نشان باقی نہ رہے۔
موسم کی تغیراتی تبدیلیوں کے حوالے سے شائع ہونے والی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ پاکستان کے کئی علاقوں میں گرمی کی شدت ہرسال بڑھ رہی ہے اسی باعث رواں برس بلوچستان کے علاقے سبی کا درجہ حرارت 52 ڈگری سینٹی گریڈ تک پہنچا۔ ماہرین کے مطابق زمین کا درجہ حرارت جس تیزی سے کم ہورہا ہے اُس سے اندازہ کیا جاسکتا ہے کہ 2100 عیسوی میں جنوبی ایشیا کا درجہ حرارت انسان برداشت نہ کرسکے خاص طور پر پاکستان کے علاقے بلوچستان کا درجہ حرارت انسانی برداشت سے باہر ہوسکتا ہے۔رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ آئندہ آنے والی تین دہائیوں میں پاکستان، بھارت، بنگلہ دیش سمیت متعدد ممالک میں گرمی کی شدت میں بے پناہ اضافہ ہوسکتا ہے جس سے زرخیز علاقہ بھی متاثر ہوگا اور اس خطے میں اناج کی قلت پیدا ہوجائے گی ساتھ ہی گرمیوں کے موسم میں ایسی لو چلے گی جس سے انسانوں کا بچنا ناممکن ہوگا۔

پاکستان کا درجہ حرارت انتہائی حد تک بڑھنے کا خدشہ: Reviewed by on . موسم کی تغیراتی تبدیلیوں پر نظر رکھنے والے ماہرین نے پاکستان میں بڑھتے درجہ حرارت کے پیش نظر خدشہ ظاہر کیا ہے کہ آئندہ پچاس برس کے دوران جنوبی ایشیاء کے متعدد موسم کی تغیراتی تبدیلیوں پر نظر رکھنے والے ماہرین نے پاکستان میں بڑھتے درجہ حرارت کے پیش نظر خدشہ ظاہر کیا ہے کہ آئندہ پچاس برس کے دوران جنوبی ایشیاء کے متعدد Rating: 0

Leave a Comment

scroll to top