ہفتہ , 21 اکتوبر 2017

Home » اضافی » کراچی میں اسٹریٹ کرائم میں اضافہ:

کراچی میں اسٹریٹ کرائم میں اضافہ:

کراچی میں آئے روز جرائم پیشہ افراد کی بڑھتی ہوئی وارداتوں نے شہریوں کا جینا محال کر دیا ہے۔ ٢٠١٦ کے دو ماہ کے دوران بینک ڈکیتی، بھتہ خوری، اور اسٹریٹ کرائم میں پچھلے سال کے مقابلے ٥٠ فیصد اضافہ سامنے آیا ہے جو قانون نافد کرنے والوں کی نا اہلی کا منہ بولتا ثبوت ہے۔ سونے پے سہاگا یہ کہ قانون نافذ کرنے والے ادارے بھی ان کی پشت پناہی کرتے نظر آتے ہیں۔ اس صورت حال میں عوام جائے تو کہاں جائے؟ ضلعی انتظامیہ اس صورت حال میں محض دعوے پر ہی ااقتفہ کرتی نظر آتی ہے۔ اور دعوے دھرے کے دھرے ہی رہ جاتے ہیں۔ اس صورت حال میں عوام کس سے امید کرے۔ یہ سوال ہر شہری کی زبان پر موجود ہے، اور اسکا جواب ہر عام وخاص شخص ضلعی انتظامیہ سے پوچھنا چاہتا ہے لیکن افسوس اس کا جواب تو وہ دعوےدار بھی نہیں جانتے جو ایوانوں میں بھی خواب خرگوش کے مزے لیتے نظر آتے ہیں۔

کراچی میں اسٹریٹ کرائم میں اضافہ: Reviewed by on . کراچی میں آئے روز جرائم پیشہ افراد کی بڑھتی ہوئی وارداتوں نے شہریوں کا جینا محال کر دیا ہے۔ ٢٠١٦ کے دو ماہ کے دوران بینک ڈکیتی، بھتہ خوری، اور اسٹریٹ کرائم میں کراچی میں آئے روز جرائم پیشہ افراد کی بڑھتی ہوئی وارداتوں نے شہریوں کا جینا محال کر دیا ہے۔ ٢٠١٦ کے دو ماہ کے دوران بینک ڈکیتی، بھتہ خوری، اور اسٹریٹ کرائم میں Rating: 0

Leave a Comment

scroll to top